ساون مبارک—- مون سون مبارک

وطن عزیز میں سن 2017 کا ساون / مون سون اوسط زاویہ کے مطابق معمول سے کم رہا ما سواے چند علاقوں کے جہاں معمول سے زائد بارش ریکارڈ کی گئی

Image result for pakistan map

ہم ماحولیاتی حالات اور دیگر مطلقہ پیرامیٹرز پر بغور تفکر کے بعد اس نتیجہ پر پوہنچھے ہیں کہ موجودہ سال سن 2018 میں ساون اپنے رنگ کچھ اس طرح بکھیرے گا کہ پاکستان میں معمول یا معمول سے زائد بارشوں کی خوش نوید سنائی جاتی ہے البتہ %15  کمی و پیشی ممکن ہے- ہم نے کئ مختلف عناصر و حالات اور پیرامیٹرز کا تحقیقی جائزہ لیتے ہوے سن 2018 کے لیے یہ حتمی تجزیہ جاری کیا ہے ان پیرامیٹرز میں سے سب سے اہم  نکات کا تذکرہ کیا ہے جن میں مشمول ہیں: ای.این.ایس.او، آئ.او.ڈی، ایم.جے.او ویو، ڈیپ اٹموسفرک سرکولیشن اینالیسس

 

1 ENSO                                                   ای.این.ایس.او
2 IOD                                                            آئ.او.ڈی
3 MJO / OLR Values                               ایم.جے.او ویو
4 Deep Atmospheric Circulation Analysis          ڈیپ اٹموسفرک سرکولیشن اینالیسس

 

ساتھ ہی ابتدا میں ہم آپ کو آگاہ کرتے چلیں کہ ای.این.ایس.او اور آئ.او.ڈی کے ساون کے دورانیے میں نیوٹرل / نارمل رہنے کے قوی امکانات ہیں جس کا مون سون / ساون پر مثبت اثر ظاہر ہوگا البتہ دیگر حالات اس بات کی جانب اشارہ کر رہے ہیں کہ آئ.او.ڈی ساون کے مرحلہ اول کے آخر میں پازیٹو ہو جائے گا جو کہ ایک خوش آئندہ بات ہے جبکہ ساون کے اختمامی مراحل میں ایل.نینو کے بھی امکانات ظاہر کیے جا رہے ہیں

پاک ویتھر نے ساون کو دو مراحل میں بیان کیا ہے تا کہ قارئیں با آسانی پیشنگوئی سے مستسفہ ہو سکیں اور اسکی ظاہری و باطنی تصویر کا بغور مطالعہ کر سکیں

ساون کا مرحلہ اول جون تا جولائی
ساون کا مرحلہ دوم اگست تا ستمبر

 

  ساون مرحلہ اول

( جون  تا جولائی )

 

ساون مرحلہ اول ای.این.ایس.او اور آئ.او.ڈی کی نارمل حالات اور ایم.جے.او ویو اور سومالین کررنٹس میں اضافے کے سبب پورے برصغیر کے لیے مثبت ثابت ہوگا

:سندھ

Image result for pakistan map

دارلسلام میں معمول یا معمول سے کچھ زائد بارشیں متوقعہ ہیں ہمارے تجزیے کے مطابق یہ تخمیہ لگایا گیا ہے کہ بارش کا تناسب پچھاسي فیصد سے ایک سو پانچ فیصد ( %105 – %85 ) کے درمیان رہنے کا امکان ہے جبکہ جنوب مشرقی سندھ میں بارش کا تناسب قدرے زیادہ یعنی ایک سو دس فیصد سے ایک سو بیس فیصد ( %120 – %110) محسوس کیا جا رہا ہے- کراچی سمیت ساحلی سندھ میں بارشوں کا تناسب مع ١٥% انحراف نووے فیصد سے ایک سو دس فیصد ( %110 – %90 ) ظاہر کیا گیا ہے

اہم نقات

  • سندھ میں کہیں کہیں موسلادھار بارش (کلاؤڈ برسٹ – کم دورانیے میں شدید بارش) متوقعہ ہے مزید جنوب مشرقی علاقہ جات بشمول تھر میں تیز آندھیوں کے چلنے کے بھی واضح امکانات ہیں
  • ساون مرحلہ اول میں کم از کم مون سون کے دو بارش کہ نظام کی آمد متوقعہ ہے
  • سندھ میں ساون کا با ضابطہ آغاز 25 جون سے 10 جولائی کے درمیان ہوگا جبکہ اس سے قبل ہی جون کے ہفتہ دوم اور سوم سے ہی پری – مون سون کی بارشوں کا آغاز جنوب مشرقی علاقہ جات میں عروج پر ہوگا مزید یہ کہ مرحلہ اول میں سندھ اور گجرات ساون کا محور قرار پائینگے
  • پری – مون سون کے پیش نظر مغربی برکھائی ہوائیں سے ٹکراؤ ممکن ہے جو چند خاص واقعات کو جنم دے سکتا ہے
  • درجہ حرارت معمول کے مطابق رہینگے
  • کراچی میں بارش کا تناسب معمول کے مطابق پچانوے فیصد سے ایک سو دس فیصد (  %110 – %95 ) کے درمیان رہنے کی پیشنگوئی کی جاتی ہے جبکہ جون کے آغاز سے ہی شہر میں سمندری بادلوں کے سبب موسم خوش گوار رہنے کے ساتھ ساتھ وقتاً فوقتاً بوندا بندی اور تیز ہواؤں کی نوید بھی پیش نظر رہے البتہ یہ سلسلہ جون کے آخری ہفتے سے شدّت اختیار کر جائے گا

:پنجاب

پنجاب میں اوسط بارش کا تناسب  معمول سے کم رہنے کا امکان ہے البتہ ساون سندھ سے قبل ہی پنجاب کا رخ کر سکتا ہے متوقع مورخہ 25 جون سے 5 جولائی کے درمیان ہیں- شمالی پنجاب میں بارش کا تناسب پچانوے فیصد سے ایک سو پندرہ فیصد ( %115 – %95 )، وسطی پنجاب میں اسسی سے نووے فیصد ( %90 – %80 ) جبکہ جنوبی پنجاب میں ستر سے اسسی فیصد ( %80 – %70 ) رہنے کی امید ظاہر کی جا رہی ہے- اگر ہم اوسط تناسب کا جائزہ لیں تو مکمّل پنجاب میں بارش کا تناسب معمول کے موافق اسسی سے ایک سو پانچ فیصد ( %105 – %80 ) رہے گا

اہم نقات

  • پنجاب کی مشرقی پٹی پر شدید بارشیں متوقعہ ہیں
  • مرحلہ اول میں دو ہیٹ ویو کے خطرات لاحق ہیں
  • پری – مون سون وسیع پیمانے پر اپنا رنگ تو نہیں دکھاے گا مگر جون کے وجد کے بعد ازاں شمال مشرقی، جنوب مشرقی اور جنوب مغربی میں مختلف مقامات پر بارشیں ہونگی

:بلوچستان

Image result for BALOCHISTAN: map

بلوچستان کے صرف مشرقی اور شمال مشرقی علاقے ہی مون سون کے احاطے میں آتے ہیں لہذا ساون کا ان علاقوں پر بھی گہرا اثر و رسوخ ہوتا ہے، ہم شمال مشرقی علاقوں میں پچھاسي سے پچانوے فیصد ( %90 – %85 ) اور مشرقی حلقوں میں سو سے ایک سو دس (  %110 – %100 ) فیصد بارشیں متوقعہ کر رہے ہیں البتہ قلیل کمی و پیشی خاطر خواہ نہیں

اہم اعشاریه

کثیر رقبہ پر ڈویلپمنٹ کے تحت کئی دیگر مقامات پر موسلادھار بارشیں ہو سکتی ہیں

 

:خیبر پختون خواہ

اعلی جغرافیہ کے اثر و رسوخ صوبے میں ساون اپنا رنگ ظاہر کرتا ہے جنوبی حصّے میں بارش کا تناسب پچھاسي سے پچانوے فیصد ( %95 – % 85) اور شمالی حصّے میں سو سے ایک سو دس فیصد ( %110 – %100) رہنے کا امکان ہے- خیبر پختون خواہ میں ساون کا آغاز پنجاب کے ساتھ ہی 25 جون سے 5 جولائی کے درمیان واقع پذیر ہوگا

اہم اعشاریه

مختلف حصّوں شدید بارشیں ممکن ہیں مزید یہ کہ نم ہواؤں کے ملاپ سے شدید ترین بارشیں ہو سکتی ہیں

 

:کشمیر و گلگت بلتستان

مون سون کا با ضابطہ آغاز 20 جون سے 3 جولائی کے درمیان ہوگا جس سے دونوں صوبوں میں معمول کے مطابق یا معمول سے زائد یعنی سو سے ایک سو تیس فیصد ( %130 – %100 ) بارشیں متوقعہ ہیں

اہم اعشاریه

انتہائی شدید بارشیں ممکن ہیں ساتھ ہی ہواؤں کے ٹکراؤ کے بھی مثبت امکانات ہیں جنکا انجام انتہائی شدید بارشوں کی صورت میں واضح ہے

 

 ساون مرحلہ دوم

( اگست تا ستمبر )

دیگر موسمی نمونوں میں تضاد اور فلوقت مستقبل میں زمینی حالات سے نا آشنگی کے سبب ہم ساون مرحلہ دوم کی پیشنگوئی کے بابت شبہات کے قائل ہیں البتہ امید کی جاتی ہے کہ آئ.او.ڈی اپنے مثبت  ادوار میں ہوگا اور اس کی وجہ سے معمول سے زائد بارشیں ہونگی جبکہ مون سون بریک کا دورانیہ جولائی کے اختتام سے شروع ہو کر اگست کے آغاز میں انتہا پذیر ہوگا جس کے سبب اس دوران موسم خشک رہنے کے قوی امکانات ہیں

:سندھ

انتہائی وسعت نظری سے جانچنے کے بعد ہم اس نتیجہ پر پوہنچھے ہیں کہ معمول کی مناسبت سے ساٹھ سے ستر ( %70 – %60 ) فیصد بارشیں ہی متوقعہ ہیں حالانکہ زیری سندھ بشمول کراچی اور جنوب مشرقی حصص میں نووے سے سو ( %100 – %90 ) فیصد بارشیں ہو سکتی ہیں البتہ %30 کمی و پیشی واضح رہے

اہم نقات

  • ساون مرحلہ دوم میں کم از کم دو سسٹم جنوبی سندھ پر اثر انداز ہونگے
  • بارشوں کا مرکز موقوف ہو سکتا ہے
  • ساحلی و جنوبی سندھ میں شدید بارشیں دیکھنے کو مل سکتی ہیں
کراچی میں ساون مرحلہ دوم میں بھی موسم خوش گوار رہنے کے ساتھ ساتھ سمندری بادلوں سے بوندا بندی اور ہواؤں کا سلسلہ جاری رہنے کا امکان ہے

:پنجاب

مرحلہ دوم پنجاب کے لیے کافی مثبت ثابت ہوگا، شمالی پنجاب میں معمول کی مناسبت سے سو سے ایک سو دس فیصد (  %110 – %100 )، وسطی پنجاب میں اسسی سے پچانوے فیصد ( %95 – %80 ) اور جنوبی پنجاب میں ستر سے اسسی فیصد ( %80 – %70 ) بارشیں ہونگی جبکہ %30 کمی و پیشی واضح رہے

اہم نقات

  • مختلف حصص میں شدید بارشیں ہونگی
  • مشرقی و مغربی ہواؤں کے میل سے شدید ترین نتائج سامنے آ سکتے ہیں
  • دریاوں میں طغیانی اور سیلاب کی کشیدہ صورت حال بھی پیدا ہو سکتی ہے

:بلوچستان

معمول کی مناسبت سے شمال مشرقی علاقہ میں اسسی سے نووے فیصد ( %90 – %80 ) جبکہ مشرقی حصّے میں نووے سے ایک سو پانچ ( %105 – %90 ) فیصد بارش ہو سکتی ہیں

اہم اعشاریه

مختلف حصص میں شدید بارشیں ہوسکتی ہیں

 

:خیبر پختون خواہ

معمول کی مناسبت سے شمالی علاقہ جات میں نووے سے سو فیصد ( %100 – %90 ) جبکہ جنوبی حصّے میں پچھاسي سے پچانوے ( %95 – %85 ) فیصد بارش ہو سکتی ہیں

اہم اعشاریه

  • مختلف حصص میں شدید بارشیں ہوسکتی ہیں
  • مشرقی و مغربی ہواؤں کے میل سے شدید ترین نتائج سامنے آ سکتے ہیں
  • دریاوں میں طغیانی اور سیلاب کی کشیدہ صورت حال بھی پیدا ہو سکتی ہے

:کشمیر و گلگت بلتستان

اس خطّے میں ساون مرحلہ وار دوم کے سلسلے میں معمول کی منابت سے پچھاسي سے سو ( %100 – %85 ) فیصد بارشیں متوقعہ ہیں

اہم اعشاریه

  • مختلف حصص میں شدید بارشیں ہوسکتی ہیں
  • دریاوں میں طغیانی اور سیلاب کی کشیدہ صورت حال بھی پیدا ہو سکتی ہے

 

لب لباب

١ مجموعی طور پر پاکستان میں معمول کے مطابق یا معمول سے کچھ زائد بارشیں متوقعہ ہیں البتہ کچھ مقامات جیسے شمالی پاکستان میں چند مقامات پر شدید سپیل کے پیش نظر حالت کشیدہ ہو سکتے ہیں جس سے سیلاب جیسی صورت حال کا پیدا ہونا اور دریاؤں میں طغیانی آنا بالعموم ہیں

٢ کراچی سمیت ساحلی سندھ میں معمول سے زائد بارشوں کی امید ہے جبکہ شہر قائد میں سمندری بادلوں کی ساخت عام طور سے زیادہ مضبوط ہوگی جو وقتاً فوقتاً بوندا باندی کا سبب بنے گی

٣ ما سواے جنوبی بلوچستان، جنوبی سندھ اور وسطی سندھ ملک کے دیگر حصّوں میں درجہ حرارت معمول کے مطابق یا معمول سے کم رہ سکتا ہے

٤ باوجود غیر واضح حالت کے ہم ساحلی سندھ میں ساون مرحلہ دوم میں معمول سے زائد بارشوں کی توقع رکھ رہے ہیں

٥ کراچی میں بھی موسلادھار بارشوں کے ساتھ انتہائی ساخت موسم درپیش ہو سکتا ہے ہم شہر میں معمول سے کچھ زیادہ بارش متوقعہ کر رہے ہیں جسکی مقدار دو سو سے تین سو ملی میٹر کے درمیان ہے البتہ کمی و پیشی واضح رہے

٦ گجرات و راجستان کی سر زمین پر کم از کم ایک مون سون کے نظام تشکیل پانے کے مثبت امکانات ہیں جسے بحرعرب سے بھی دیگر مراحل میں پشت پناہی حاصل ہوگی

٧ ممکن ہے کہ ساون / مون سون کے واپس جانے میں دیری واقع ہو

مون سون / ساون سن ٢٠١٨ براے ہندوستان

Image result for india rain

ساون کا آغاز اپنے متعین وقت کے مطابق ہوگا؛ مرحلہ اول میں ہندوستان میں معمول یا معمول سے زیادہ بارشیں ہونگی- وسطی اور جنوب مغربی حصص میں دیگر مقامات پر سخت ترین واقعات ممکن ہیں جبکہ مرحلہ دوم معمول کے مطابق جائے گا اگست میں بارشوں میں قدرے کمی ہے گی جبکہ ستمبر میں بارشیں عروج پر ہونگی جبکہ ممکن ہے کہ ساون / مون سون کے واپس جانے میں دیری واقع ہو

 

 سے منسلک ہے PakWeather.com یہ پیشنگوئی

 کاوش: پاک ویدر ٹیم

مون سون بارشوں کی نوید
4.9 (98.33%) 12 votes
Haider Saqib

Posted by Haider Saqib

Leave a reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *