آج سے شدید سردی کی لہر پاکستان پر حملہ آور ہوگی! سندھ سے کشمیر تک شدید سردی متوقع!

 

اسلام علیکم! پاکستان کے موسم کے سب سے بڑے پلیٹ فارم سے ہم ہیں ⭐ایڈمن وسیم عباس اور ⭐ایڈمن محمد فیضان خان اور آج ہم نے آپ کو پاکستان بھر میں متوقع شدید سردی کی لہر کی تفصیلات بتانے کے لئے متوجہ کیا ہے۔

ایک معتدل شدت کا مغربی سسٹم 26-28 دسمبر کے دوران ملک کے بالائی علاقوں میں بارشوں اور برف باری کا باعث بنے گا یہی مغربی سسٹم اپنے ساتھ سردی کی لہر بھی لائے گا جو 27 دسمبر سے 2 جنوری کے دوران ملک بھر کو متاثر کرے گی، شدت میں شدید ہوگی مگر پیچھے سے مزید مغربی سسٹم آنے کی وجہ سے مختصر سے دورانیہ کی ہوگی۔ اس سردی کی لہر کی وجہ سے ملک بھر میں درجہِ حرارت مختلف علاقوں میں معمول سے 5-8 ڈگری گر جائیں گے۔

عوام سے گزارش ہے کہ اس سردی کی شدید لہر کے پیش نظر، سخت احتیاطی تدابیر اختیار کریں، گرم کپڑے پہنیں، گرم تاثیر کے مشروبات پئیں اور اپنی صحت کا خاص خیال رکھیں کیونکہ یہ بات ہم جانتے ہیں کہ کورونا وائرس ٹھنڈے درجہِ حرارت پر زیادہ پھیلتا ہے۔ صاحب حیثیت افراد سے گزارش ہے کہ غریب اور کم حیثیت والے افراد کی امداد ضرور کریں اور جانوروں کا بھی خیال کریں۔

سندھ میں شدید سردی:
27 دسمبر سے 2 جنوری کے دوران یہ شدید سردی کی لہر سندھ کو جمائے گی، اس دوران موہنجوڈارو میں کم سے کم درجہِ حرارت 00 سے منفی 2- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 18-20 ڈگری  سکھر اور لاڑکانہ میں کم سے کم درجہِ حرارت 2 سے 00 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 17-19 ڈگری، دادو میں کم سے کم 1-2 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 17-20 ڈگری، نوابشاھ میں کم سے کم درجہِ حرارت 3-1 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 19-21 ڈگری، حیدرآباد میں کم سے کم درجہِ حرارت 3-5 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 20-22 ڈگری، تھرپارکر اور مٹھی میں کم سے کم درجہِ حرارت  2-0 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ درجہِ حرارت 21-23 ڈگری، ٹھٹھہ میں کم سے کم درجہِ حرارت 6-8 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 21-23 ڈگری بدین میں کم سے کم درجہِ حرارت 7-5 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 21-23 ڈگری، میرپور خاص میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-4 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 20-22 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرجانا متوقع ہے۔ (کمنٹس میں اپنے علاقے کا درجہِ حرارت پوچھیں)

سندھ کے سب سے بڑے شہر #کراچی کی بات کی جائے تو کراچی میں بھی سردی کی لہر 27 دسمبر سے متاثر کرے گی اور 02 جنوری تک جاری رہے گی۔ اس دوران کراچی کا کم سے کم درجہِ حرارت 3-6 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرجانے کی امید ہے، جبکہ شہر کا زیادہ سے زیادہ درجہِ حرارت 20-22 ڈگری تک گرجانا متوقع ہے۔ اس دوران کراچی میں 20-25 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے تیز ہوائیں بھی چلیں گی جبکہ جھکڑ 35-40 کلومیٹر فی گھنٹہ تک جاسکتے ہیں۔ ان تیز ٹھنڈی ٹھار ہواؤں کی وجہ سے شہر میں محسوس کیئے جانے والا درجہِ حرارت بھی بہت کم ہوگا یعنی سردی شدید لگے گی۔

پنجاب میں شدید سردی:
27 دسمبر سے 2 جنوری کے دوران متاثر کرنے والی اس شدید سردی کی لہر کے باعث پنجاب کے بڑے شہروں میں درجہِ حرارت یہ رہیں گے۔ اسلام آباد اور راولپنڈی میں کم سے کم درجہِ حرارت 00 سے منفی 2- ڈگری، جبکہ زیادہ سے زیادہ 12-15 ڈگری، گجرانوالہ میں کم سے کم درجہِ حرارت 00 سے منفی 1- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 15-17 ڈگری، #لاہور میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-0 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 14-16 ڈگڑی، فیصل آباد میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-0 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 16-18 ڈگری، ملتان میں کم سے کم درجہِ حرارت 3-1 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 17-19 ڈگری، ڈیرہ غازی خان میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-0 ڈگری، جبکہ زیادہ سے زیادہ 16-18 ڈگری اور بہاولپور میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-0 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 18-20 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرجانا متوقع ہے۔ (کمنٹس میں اپنے علاقے کا درجہِ حرارت پوچھیں)

بلوچستان میں شدید سردی:
اس سردی کی لہر سے بلوچستان سب سے زیادہ متاثر ہوگا جہاں مختلف علاقوں میں درجہِ حرارت معمول سے 8-10 ڈگری کم بھی گرسکتے ہیں اس دوران #کوئٹہ میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 10 سے منفی 14 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 4-6 ڈگری، قلات اور زیارت میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 11 سے منفی 16 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 3-6 ڈگری، سبی میں کم سے کم درجہِ حرارت 3-1 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 17-19 ڈگری، تربت میں کم سے کم درجہِ 7-8 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 20-22 ڈگری، خضدار میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 5- سے منفی 7- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 15-17 ڈگری، سبی میں کم سے کم درجہِ حرارت 1 سے منفی 1- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 17-19 ڈگری اور گوادر میں کم سے کم درجہِ حرارت 11-9 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ درجہِ حرارت 23-25 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرجانا متوقع ہے۔ (کمنٹس میں اپنے علاقے کا درجہِ حرارت پوچھیں)

خیبرپختونخوا میں شدید سردی:
خیبرپختونخوا میں 27 دسمبر سے 2 جنوری کے دوران شدید سردی کی لہر متاثر کرے گی اس دوران بڑے شہروں میں یہ درجہِ حرارت متوقع ہیں۔ #پشاور اور کوہاٹ میں کم سے کم درجہِ حرارت 2 سے منفی 1- ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 14-16 ڈگری، مردان میں کم سے کم درجہِ حرارت 1 سے منفی 1- ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 14-16 ڈگری، ڈیرہ اسماعیل خان میں کم سے کم درجہِ حرارت 0-2 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 15-18، سوات میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 2 سے منفی 4 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 7-8 ڈگری، ایبٹ آباد میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 1- سے منفی 3- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 11-13 ڈگری، مینگورہ میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 2- سے منفی 4- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 11-13 ڈگری، چترال میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 8 سے منفی 10 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ درجہِ حرارت 2-0 ڈگری، کالام میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 12- سے منفی 14- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 1 سے منفی 1- ڈگری سینٹی گریڈ تک گرجانا متوقع ہے۔ (کمنٹس میں اپنے علاقے کا درجہِ حرارت پوچھیں)

کشمیر گلگت میں شدید سردی:
کشمیر اور گلگت بلتستان بھی اس سردی کی لہر سے سب سے زیادہ متاثر ہوں گے۔ #سکردو میں کم سے کم درجہِ حرارت درجہِ حرارت منفی 15 سے منفی 20 ڈگری، اور زیادہ سے زیادہ منفی 6 سے منفی 8 ڈگری، گلگت میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 10 سے منفی 14 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 00 سے منفی 2- ڈگری، مظفرآباد میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 0 سے منفی 3 ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ 11-13 ڈگری، کوٹلی میں کم سے کم درجہِ حرارت 00 سے منفی 2- ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 13-15 ڈگری، بھمبر میں کم سے کم درجہِ حرارت 2-0 ڈگری اور زیادہ سے زیادہ 16-18 ڈگری اور سرینگر میں کم سے کم درجہِ حرارت منفی 8+ سے منفی 11- ڈگری جبکہ زیادہ سے زیادہ درجہِ حرارت 4-2 ڈگری سینٹی گریڈ تک جانا متوقع ہے۔ (کمنٹس میں اپنے علاقے کا درجہِ حرارت پوچھیں)

جنوری کے پہلے یا دوسرے ہفتے کے دوران سندھ سے کشمیر تک طاقتور مغربی سسٹم سندھ سے کشمیر تک بارشوں کا باعث بنے گا، اس دوران شہر کراچی میں بھی بارش کے امکانات بنتے نظر آرہے ہیں! تفصیلات انشاء اللہ جلد شائع کریں گے! اسکے علاوہ جنوری کی ماہانہ ملک گیر پیشگوئی 30 دسمبر اور مون سون 2021 پر پہلا نظریہ انشاء اللہ یکم جنوری کو شائع ہوگا! دیکھنا مت بھولیئے گا!

ہماری چھوٹی سی مدد کرنے کے لئے اس پوسٹ کو آگے زیادہ سے زیادہ شئیر کریں شکریہ۔


Post a comment

1 Comments